Thursday, December 19, 2013

Poem :: Musafir Zindagi


وہ آگے ہی نہیں بڑھے
اور ہم چلتے رہ گئے

وہ رہ گئے پیچھے
یا ہم آگے نکل گئے؟

کچھ پل کے لئے چلے ساتھ 
چھوڈ دیا پھر ہمارا ہاتھ

بیٹھے رہے وو کھیت می 
چلتے رہے ہم ریل می
-

Here's the transliteration
Wo aage hi nahi badhe
Aur hum chalte rah gaye

Wo rah gaye peechhe
Ya hum aage nikal gaye?

Kuch pal ke liye chale saath
Chhod diya phir humara haath

Baithe rahe woh khet mei
Chalte rahe hum rail mei
-
Asra